New, Insurance, Public, Government, Daily, Property, Rents

گوگل کا نیا غیرمرئی کیپچیا سکیورٹی نظام

وہ ویب سکیورٹی سسٹم جو صارفین کے انسان یا کمپیوٹر ہونے میں تفریق کرتا تھا اب گوگل کے نئے نظام کے باعث ختم ہو جائے گا۔
کیپچا کہلانے والے اس سکیورٹی نظام میں صارفین سے کوئی پہیلی حل کرنے کو کہا جاتا تھا جسے کرنے میں عمومًا کمپیوٹر کو مشکل ہوتی ہے۔
یہ کیپچیا خود کار بوٹس کی جانب سے ویب سائٹس تک رسائی کو روکنے کے لیے بنائے گئے ہیں۔
* یاہو پر سائبر حملے سے ایک ارب صارفین متاثر
گوگل کے نئے سکیورٹی نظام میں کسی بھی شخص کے ویب سائٹ کے ساتھ رابطے کے انداز سے پہچانا جائے گا کہ آیا یہ انسان ہے کہ کمپیوٹر۔ اب زیادہ تر لوگوں کے لیے پہیلیوں کی ضرورت نہیں رہے گی۔
کیپچیا کے چیکس عموماً کنسرٹس کے ٹکٹ فروخت کرنے والی ویب سائٹس پر استعمال کیے جاتے ہیں تاکہ خود کار بوٹس کے ذریعے بہترین ٹکٹوں کی فروخت کو روکا جا سکے۔
یہ اس وقت بھی سامنے آتے ہیں جب کوئی کسی غلط پاسورڈز کے ساتھ کسی ویب سائٹس پر لاگ ان کی کوشش کرے یا ویب سائٹ خود کار کوششوں کی نشاندہی کرے۔
ان کیپچیا میں ایسی پہیلیاں ہوتی ہیں جو انسانوں کے لیے تو بہت سادہ ہوتی ہیں تاہم کمپیوٹر کے لیے قدرے مشکل ہوتی ہیں:
جانوروں کی بہت سی تصاویر میں سے کتے کی تصویر شناخت کرنا
کسی بھی سڑک پر لگے نشان میں موجود نمبروں کو دوسرے باکس میں ٹائپ کرنا
یا کسی آواز میں دوران مویسقی بولے گئے نمبروں کو ٹائپ کرنا
تاہم بعض اصلی صارفین کو ان پہیلیوں کی مداخلت بے وقوفانہ لگتی ہے۔
گوگل کا ری کیپچیا سسٹم کو پہلے ہی سادہ کر دیا گیا جس میں صارفین کو ان کی مطلوبہ سائٹ پر جانے کے بعد ایک چیک باکس کو ٹک کرنے کو کہا گیا ہے۔ یہ باکس اس بات کا جائزہ لیتا ہے کہ صارف کس طرح سے اس سائٹ کو استعمال کرتا ہے جس کے بعد وہ انسانی کلکس اور بوٹ کے کلکس میں فرق کرتا ہے۔
مثلاً ایک خود کار نظام کسی بھی ویب سائٹ کے فارم کو بھرنے میں محض ایک سیکنڈ لگائے اور سا سارے عمل میں ماؤس کو حرکت بھی نہ دے۔
گوگل کے تازہ ترین نظام میں یہ چیک باکس بھی ختم کر دیا گیا ہے بلکہ اب یہ خود ہی جائزہ لیتا ہے کہ انسان کس طرح سے ویب سائٹ استعمال کرتے ہیں۔
تاہم بعض معاملات میں مشکوک سرگرمیوں کے باعث یہ پہیلی پھر سے سامنے آ سکتی ہے۔


loading...